بچوں کے سیکھنے اور آپس میں بانٹنے کے لئے صحت کے 100 عدد پیغامات صحت کی تعلیم کے عام اور معتبر پیغامات ہیں جن کا ہدف 8-14 سال کے بچے ہیں۔. لہذا اس میں10-14 سال تک کے نو عمر جوان شامل ہیں۔ ہم محسوس کرتے ہیں کہ یہ بات خاص طور پرمفید اور اہمیت کی حامل ہے کہ 10-14 سال کی عمر کے نو عمر جوانوں کو باخبر رکھے جانے کی یقین دہانی کی جاۓ کیونکہ اس عمر کا طبقہ اکثر و بیشتر اپنے اہلِ خانہ میں چھوٹے بچوں کی دیکھ بھال کر رہا ہوتا ہے. . اس کے علاوہ، اس طرح سے اپنے اہلِ خانہ کی مدد کرنے کیلئے جو کام وہ سر انجام دے رہے ہیں اس کو سراہنا اور اس سے آگاہی حاصل کرنا بہت اہم ہے۔

یہ100 پیغامات ان 10 میسجز پر مشتمل ہیں جن میں سے ہر ایک صحت کے 10 کلیدی موضوعات کا حامل ہے: ملیریا، اسہال، غذائیت، کھانسی سردی اور بیماری، آنتوں کے طفیلی کیڑے، پانی و صفائی، حفاظتی ٹیکے، ایچ آئی وی(HIV) اور ایڈز اورحادثات، زخم اور ابتدائی ایام کی نشوونما. صحت کے عام پیغامات والدین اور صحت کے ماہرین کے لئے بچوں کے ساتھ گھرمیں، اسکولوں میں، کلبوں اور کلینکس میں استعمال کرنے کے لئے ہیں.

موضوع 9 میں شامل 10 پیغامات یہ ہیں: حادثات اور چوٹ لگنے سے بچنا

  1. کھانا پکانے کی جگہیں بچوں کےلئے خطرنا ک ہیں۔ انھیں آگ اور تیز دھار یا وزنی چیزوں سے دور رکھیں۔

  2. بچوں کیلئے آگ کے دھوئیں میں سانس لینے سے اجتناب کرنا ضروری ہے۔ اس سے بخار اور کھانسی لاحق ہو جاتی ہے۔
  3. ہر زیریلی چیز کو لازماً بچوں کی پہنچ سے دور رکھیں۔ مشروبات کی خالی بوتلوں میں زہر نہ رکھیں۔
  4. اگر کوئی بچہ جل جائے، تو جلنے کی جگہ پر فوراً ٹھنڈا پانی ڈالیں تاوقتیکہ جلن کم ہو جائے (10 منٹ یا اس سے زیادہ)۔
  5. موٹر گاڑیاں اور بائیسائیکل روزانہ بچوں کے ہلاک اور زخمی ہونے کا باعث بنتی ہیں۔ تمام موٹر گاڑیوں سے محتاط رہیں اور دوسروں کو بھی، محفوظ رہنے کے بارے میں بتائیں۔
  6. بچوں کے لئے چاقو، شیشہ، بجلی کے پلگ، تار، کیل، سوئی وغیرہ جیسے چھوٹے چھوٹے خطرات پر نظر رکھیں۔
  7. بچوں کو مٹی کھانے یا چھوٹی اشیاء (جیسے کہ سکہ، بٹن) کو اپنے منہ کے قریب لے جانے سے روکیں کیونکہ یہ چیزیں تنفس کو روک سکتی ہیں۔
  8. چھوٹے بچوں کو پانی (دریا، جھیلیں ، تالاب، کنویں ) کے قریب جہاں گرنے کا خدشہ ہو کھیلنے سے روک دیں۔
  9. گھر یا اسکول کیلئے ایک فرسٹ ایڈ کٹ (صابن، قینچیاں، جراثیم ختم کرنے اور جراثیم سے پاک کرنے والی کریم، روئی، تھرمامیٹر، بینڈیچ/پٹیاں اور او۔آر-ایس ) تیار کریں ۔
  10. جب آپ چھوٹے بچوں کے ساتھ کسی نئی جگہ پر جائیں تو محتاط رہیں! چھوٹے بچوں کو لاحق خطرات کے بارے میں پوچھیں اور نظر رکھیں

صحت کے ان پیغامات کاصحت کے ماہر معلمین اور طبی ماہرین کی طرف سے جائزہ لیا گیا ہے اور یہ ORB ہیلتھ ویب سائٹ پر بھی دستیاب ہیں: www.health-orb.org.

بچوں کی سرگرمیوں کے بارے یہ کچھ تجاویز ہیں کہ جن سے بچوں کے لئے اس موضوع کو بہتر طور پر سمجھنے اور ان پیغامات کو دوسروں کے ساتھ بانٹنے میں مدد مل سکتی ہے۔

حادثات اور چوٹ لگنے سے بچنا: بچے کیا کرسکتے ہیں؟

  • آپ کی اپنی زبان میں اپنے الفاظ کا استعمال کرتے ہوۓ حادثات اورچوٹ لگ جانے سے بچنے کے پیغامات بنائیں

    !

  • پیغامات کو یاد کرلیں تاکہ ہم کبھی بھی انہیں نہ بھولیں!
  • یہ پیغامات دوسرے بچوں اور اپنے اہلِ خانہ کے ساتھ بانٹیں!
  • زہروں کومحفوظ طریقے سے سنبھالنے پر پوسٹرز تیار کریں: کہ انھیں کیسے سٹور کریں، لیبل لگائیں اور کیسے بچوں کی پہنچ سے دور رکھیں۔
  • ایک فرسٹ ایڈ کٹ تیارکریں کہ جب کوئی زخمی ہو جائے توایسے میں ہم اس کٹ کو استعمال کرسکیں۔
  • ایسے کھلونے بنائیں کہ جن سے کھیلنا چھوٹے بچوں کے لئے محفوظ ہو۔
  • دریا یا جھیل میں ہنگامی صورتحال مییں استعمال کیلئے ایک رسی اور تیرنے والی کوئی شے تیارکریں۔
  • اسکول کیلئے ایک فرسٹ ایڈ اسٹیشن بنائیں۔
  • بچوں کے تحفظ کے بارے میں ہر کسی کی آگاہی بڑھانے کیلئے ایک حفاظتی مہم ترتیب دیں۔
  • اپنی کمیونٹی میں یہ جاننے کیلئے ایک جائزہ لیں کہ کس کس جگہ پر ایسا پانی موجود ہے جہاں بچوں کے ڈوب جانے کا خدشہ ہے، اور بچوں کو محفوظ رکھنے کے لئے کیا کچھ کیا جا سکتا ہے۔
  • بٹ وائی کھیلیں گھروں میں ہونے والے حادثات کے بارے میں ایک گیم
  • اپنے گھروں کو محفوظ بنانے کے بارے میں سوچ بچار کریں اور پوسٹرز، گانوں اور کرداروں کے ذریعےاپنے خیالات بانٹیں۔
  • ہیلتھ کارکن سے معلوم کریں کہ گھر اور سکول کیلئے فرسٹ ایڈ کٹ میں ہمیں کن چیزوں کی ضرورت ہے۔
  • ایک پوسٹر یا خاکہ پر خطرات کی نشاندہی کریں اور کھیلیں اور دیکھیں کیا ہم حادثات کے تمام خطرات کو تلاش کر سکتے ہیں یا نہیں؟
  • سڑکوں پر بچوں کے تحفظ کے بارے میں آگاہی کیلئے مہم کاآغاز کریں۔
  • جب ہم بچے کی دیکھ بھال کر رہے ہوتے ہیں تو بچہ کے تحفظ سے آگاہی کے طور پر کردار ادا کریں۔
  • بنیادی فرسٹ ایڈ دینا سیکھیں تاکہ ہم ہنگامی صورتحال میں مدد کر سکیں، اپنی فرسٹ ایڈ مہارتوں میں اضافے اور مشق کیلئے کردار ادا کریں اور اسے اپنے اہلِ خانہ اور دوستوں کے ساتھ بانٹیں۔
  • ہمارے گھروں میں بچوں کیلئے موجود خطرات کا نقشہ بنائیں اور ایسے خطرات کو تلاش کریں۔
  • چھوٹے بچوں کو بڑوں سے چوٹ لگنے کے خطرات کے بارے میں ہم کیا جانتے ہیں، شیئر کریں۔
  • سیکھیں کہ جب ایک چھوٹے بچہ سانس نہ لے پا رہا ہو تو ہمیں کیا کرنا چاہییے اور اپنے والدین، دادا دادی اور بھائیوں اور بہنوں کو بھی بتائیں۔
  • عمومی رکاوٹوں کی نشاندہی کرنا سیکھیں جہاں پر جلنے، گر جانے، ڈوب جانے یا روڈ پر ٹریفک رش کے خطرات لاحق ہوں۔
  • پوچھیں کہ گھر میں جلنے کے خطرات کیا ہیں؟ اگر کوئی جل جائے تو ہمیں کیا کرنا چاہییے؟ بچوں کو کچن میں گرم چیزوں اور گرم محلولات سے کیسے محفوظ رکھا جا سکتا ہے؟ کیا ہماری کمیونٹی میں لوگ ننھے منے بچوں اور چھوٹے بچوں کو خطرات سے دور رکھتے ہیں؟ بڑے بچوں اور بالغوں کے مقابلے میں ننھے منے اور چھوٹے بچے دم گُھٹ جانے کے زیادہ خطرات کیوں لاحق ہیں؟ خود کو خطرے میں ڈالے بغیر ہم کس طرح ایک ڈوبتے ہوئے شخص کی مدد کر سکتے ہیں؟

ٹِپی ٹیپ تیار کرنے یا فرسٹ ایڈ کٹ میں کیا کچھ شامل کرنا چاہییے یا خطروں کی نشاندہی کے پوسٹر کے نمونہ کے بارے میں مخصوص معلومات حاصل کرنے کیلئے، براہِ مربانی رابطہ کریں www.childrenforhealth.org یا clare@childrenforhealth.org

اُردُو‎ Home